قومی

پنجاب اسمبلی،اپوزیشن لیڈر کی نامزدگی تاخیر کا شکار

لاہور(94 نیوز) پنجاب اسمبلی میں 45 دن گزرنے کے بعد بھی اپوزیشن لیڈر کی نامزدگی نہ ہوسکی۔

سابق وزیر اعلی حمزہ شہباز کا بطور اپوزیشن لیڈر تقرر ی کے حوالے سے حکومت پنجاب کی جانب سے لیت لعل سے کام لیا جانے لگا۔ تقریبا 45 دن گزر گئے پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف کا نوٹیفکیشن جاری نہ ہوسکا۔ پنجاب اسمبلی کے اجلاس کی کارروائی اپوزیشن لیڈر کے بغیر ہی چل رہی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کی جانب سے چند ہفتے قبل اسمبلی سیکرٹریٹ کو حمزہ شہباز کا نام بطور اپوزیشن لیڈر لیٹر موصول ہوچکاہے۔ لیٹر ملنے کے باوجود سپیکر نے تاحال حمزہ شہباز کا بطور اپوزیشن لیڈر نوٹیفکیشن جاری نہیں کیا جبکہ اپوزیشن چیمبر میں ویرانی نے ڈیرے ڈال رکھے ہیں۔ دوسری جانب (ن) لیگ کی جانب سے قائد حزب اختلاف کے نوٹیفکیشن جاری نہ ہونے کے خلاف ایوان میں کوئی بھی احتجاج نہیں کیا گیا۔ یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ اسمبلی میں موجود اپوزیشن کی طرف سے اجلاس کی کارروائی میں اس طرح سے حصہ نہیں لیا جارہا کہ جس طرح سے ماضی میں اپوزیشن بھرپور طریقے سے حصہ لے رہی تھی۔ اپوزیشن لیڈر کا تقرر نہ ہونے کی وجہ سے پی اے سی کے معاملات بھی تعطل کا شکار ہیں جبکہ اس وقت جو قایمہ کمیٹیوں کا رول ہے وہ بھی نہ ہونے کے برابر ہے۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close