قومی

حکومت آنے والا دسمبر نہیں دیکھے گی سیلیکٹڈ کی ہمت جواب دے چکی

گوجرانوالہ(94 نیوز) گوجرانوالہ میں پی ڈی ایم کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ حکومت آنے والا دسمبر نہیں دیکھے گی ،اب ان کی ہمت جواب دے چکی ہے ۔انہوں نے کہ اگر کوئی سلیکٹڈ ہے تو ایک سلیکٹر بھی ہے ،اب سلیکٹر کہے کہ میرا نام نہیں لینا تو کیا میں یہ کہنے کا حق نہیں رکھتا۔انہوں نے کہا ہم پاکستان کے اداروں کا احترام کرتے ہیں ،فوج سے ہماری کوئی لڑائی نہیں لیکن اگر آپ آئین کو پامال کرتے ہیں اورانتخابات میں دھاندلیاں کراتے ہیں تو آپ کے خلاف بولنا ہمارا کام نہیں تو کس کا کام ہے،ہماری طرف سے کوئی بھی جھگڑا نہیں جب بھی مداخلت ہوئی اداروں کی طرف سے ہوئی ۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آج گوجرانوالہ میں عوام کا بپھرا ہوا سمندر ،جعلی حکمرانوں کو بہہ کر دم لے گا اور جب تک اس نا پائیدار کشتی کو ڈبویا نہیں جائے گا یہ ٹھاٹھے مارتا ہوا سمندر تھمے گا نہیں ،گوجرانوالہ پہلوانوں کا شہر ہے ،پہلوان اب میدان میں اتر چکے ہیں ،جعلی حکمران اب ایک ٹمٹماتا ہوا چراغ ہے ،اب جمہوریت کی صبح طلوع ہونے والی ہے ۔انہوں نے کہا کہ عمران خان نے جمہوریت کے خوبصورت چہرے کو جس طرح گرد آلود کیا ،عوام جمہوریت کے خوبصورت چہرےایک با ر پھر سامنے لانے کے لیے نکلے ہیں ،جعلی حکمران اپنے انجا م کو پہنچنے والے ہیں ،آج کے اس اجتماع کے موقع پر گوجرانوالہ کا شکر گزار ہوں ،جب یہاں سے آزادی مارچ لے گزرے تھے ،عوام نے جس طرح استقبال کیاتھا وہ بھول نہیں سکتا ۔مولانا فضل الرحمان نے کہاکہ ہم اس نا جائز حکومت کے خلاف پہلے دن سے کھڑے رہے اور آج پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ کی صورت میں تمام جمہوریت پسند قوتیں ایک تحریک کا آغاز کر رہی ہیں ،اب اس تحریک کا طوفان دوسرے شہروں میں بھی جائے گا۔انہوں نے کہا کہ جلسے سے متعلق کہا جا رہا ہے کہ اس سے بھارت میں خوش منائی جا رہی ہے ،بھارت نے اس دن خوشی منائی تھی جب پاکستان میں جعلی وزیراعظم مسلط کیا گیا تھا ،آئین قتل ہو رہا تھا ،جمہوریت کا خون ہو رہا تھا ۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت آئی ایم ایف کے کہنے پر بجٹ بنا رہے ہیں ،ایف اے ٹی ایف کے کہنے پر قانون بنا رہے ہیں اور پھر بھی کہتے ہیں کہ ہم کسی کے ایجنڈے پر نہیں ،آپ اسرائیل کے ایجنڈے پر آئے ہیں ۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close