قومی

فردوس عاشق اعوان نے بھی پی ٹی آئی سے راہیں جد کرلیں

اسلام آباد (94 نیوز) فردوس عاشق اعوان بھی پی ٹی آئی کو چھوڑ گئیں۔

تفصیلات کے مطابق سابق وفاقی و صوبائی وزیر فردوس عاشق اعوان نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ عمران خان پہلے دوستوں پر وار کرتے ہیں۔ میں بھی انہی متاثرین میں سے ہوں۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ عمران خان اور پاکستان ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔ 9 مئی کا واقعہ قابل مذمت ہے۔ جس طرح پاکستان کے عسکری ادارے کو نشانہ بنایا گیا پوری دنیا میں ہمارا تاثر کیا گیا۔ 9 مئی کو منظم سازش کے ذریعے زمان پارک سے بھرپور منصوبہ بندی کرے کے ایک سازش تیار کی گئی جس کا مقصد قومی اداروں کی تضحیک کرنا ارو غیر ملکی آقاؤں کو خوش کرنا مقصود تھا۔ اس دن شہدا کی یادگاروں کی جس طرح بے حرمتی کی گئی، قومی ورثے کو جس طرح تباہ کیا اس نے ہر پاکستانی کی روح کو زخمی کیا۔

انہوں نے 9 مئی کے واقعات کی منصفانہ انکوائری کرانے کا مطالبہ بھی کیا، مزید کہا کہ میرے لئے سب سے پہلے پاکستان ہے، میری سیاست کا سلوگن سیاست نہیں، ریاست ہے۔ ہم نے اسی ریاست میں رہنا ہے۔ تحریک انصاف میں شمولیت بھی اسی سلسلے کی کڑی تھا۔میرا یقین ہے کہ شہدا کی محبت اور وطن کی محبت ہمارے ایمان کا حصہ ہے، جنہوں نے شہدا کی بے توقیری کی انہوں نے پاکستان کی اساس پر حملہ کیا اور نظریئے کو پارہ پارہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اور پاکستان ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے، ان کا ایجنڈا پاکستان کیلئے زہر قاتل بن گیا۔ وہ سب سے پہلے دوستوں کیلئے دشمن بنتے ہیں، ڈسنا، ٹشو پیپر کی طرح استعمال کرنا اور پھینک دینا ان کا پسندیدہ مشغلہ ہے۔  یہی وجہ ہے کہ آج وہ بندگلی میں کھڑے ہیں۔ جو لوگ انہیں بند گلی میں پہنچایا وہ شکلیں اب صرف ٹویٹ کر کے یا پریس کانفرنس کر کے لاتعلقی کا اعلان کر رہے ہیں۔ میں تحریک انصاف سے راہیں جدا کرنے کا اعلان کرتی ہوں تاہم میری سیاست جاری رہے گی کیونکہ میرے پیش نظر میرے حلقے کے عوام ہیں۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

Back to top button