قومی

پی ٹی آئی کیساتھ جانے پر ہمیں مجبور کیا گیا، فیصل سبزواری

کراچی (94 نیوز) ایم کیو ایم کے رہنما سینیٹر فیصل سبزواری کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی کے ساتھ جانے پر ہمیں مجبور کیا گیا، ان میں اتنی سکت نہیں تھی کہ ایک بھی سیٹ جیت سکیں۔

کراچی میں پارٹی ذمہ داران و کارکنان کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر فیصل سبزواری کا کہنا تھا کہ 3 اگست 2018 کو صدر عارف علوی کے دستخط سے معاہدہ کیا، معاہدہ شہری سندھ کے بنیادی مسائل پر تھا، معاہدے پر انتہائی سست رفتاری سے کام ہوا، جس پر ہم وفاقی کابینہ سے نکل گئے۔

فیصل سبزواری نے کہا کہ 9 مارچ کو وزیراعظم جب بہادر آباد آئے تو کسی بیرونی سازش کا ذکر نہیں کیا، 29 مارچ کو گورنر سندھ اور پرویز خٹک نے پارلیمنٹ لاجز میں ملاقات کی پھر بھی کسی سازش کا نہیں بتایا۔

رہنما ایم کیو ایم نے کہا کہ ہم پر الزام لگایا جارہا ہے کہ ہم نے پی ٹی آئی حکومت کو دھوکا دیا ہے، ہم نے پیٹھ پیچھے کچھ نہیں کیا، ہم نے پیپلز پارٹی کے ساتھ معاہدہ اپنے لوگوں کے حقوق کے لیے کیا ہے۔

 فیصل سبزواری نے کہا کہ ہم نے جو معاہدہ کیا ہے اس پر ملک کی تمام سیاسی قیادت نے دستخط کیے ہیں۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close