قومی

منی لانڈرنگ میں ملوث 172 افراد کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کا فیصلہ،آصف زرداری اور وزیراعلیٰ سندھ کے نام بھی شامل

اسلام آباد(94 نیوز) وفاقی کابینہ نے منی لانڈرنگ کی جے آئی ٹی میں شامل 172 لوگوں کے نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں ڈالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ جے آئی ٹی کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرائی گئی ہے اور جن 172 لوگوں کے جے آئی ٹی میں نام شامل ہیں ان کو ای سی ایل میں ڈال دیا گیا ہے جبکہ ای سی ایل آصف علی زرداری کے بغیر نامکمل ہے۔ جے آئی ٹی رپورٹ میں فریال تالپور اور مراد علی شاہ کا نام بھی شامل ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں امید ہے سابق صدر آصف علی زرداری جے آئی ٹی کو سنجیدہ سمجھیں گے اور انہیں اب معلوم ہوجائے گا کہ یہ پرانا پاکستان نہیں ہے۔ حکومت کو منی لانڈرنگ کےلئے استعمال کیا گیا جبکہ جعلی اکاؤنٹس کے ذریعے بڑی رقوم ملک سے باہر بھجوائی گئی ہیں۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ کراچی کا امن خراب کرنے کی کسی کو اجازت نہیں دیں گے۔ پے در پے واقعات سے پتہ چلتا ہے کہ کراچی میں کچھ گینگ دوبار متحرک ہو گئے ہیں۔ کراچی نے بہت قربانیاں دی ہیں اور ملک کا امن ملک سے جڑا ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ بانی متحدہ کی اشتعال انگیز تقریر پر برطانوی حکومت نے کوئی کارروائی نہیں کی جب کہ بانی ایم کیو ایم کی تقاریر میں قتل کے احکامات دیے گئے ہیں اس معاملے کو برطانیہ حکومت کے سامنے اٹھایا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ کراچی میں قتل و غارت کے احکامات بیرون ملک سے دیے جا رہے ہیں جب کہ جنوبی افریقہ اور برطانیہ کی سرزمین اس سلسلے میں استعمال کی جا رہی ہے اور اس وقت کراچی میں جنوبی افریقہ کے گینگ متحرک ہیں۔

Tags
مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close