قومی

شوگر مل ایسوسی ایشن سے جہانگیر ترین کے خلاف بغاوت سامنےآگئی

لاہور(94 نیوز) شوگر مل ایسوسی ایشن سے ایک گروپ نے جہانگیر ترین کے خلاف بغاوت کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق منظرعام پر آنے والے گروپ کا نام پروگریسیو گروپ ہے۔ ترجمان پروگریسیو گروپ وحید چوہدری کا کہنا تھا کہ موجودہ چیئرمین نعمان احمد خان کو ہٹانے کی جدوجہد کریں گے کیونکہ جہانگیرترین کا اثرورسوخ شوگر انڈسٹری کیلئے نقصان دہ ہے۔


ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ ہم کاروبار میں سیاست کو پسند نہیں کرتے، کسی قسم کی سیاست کا حصہ نہیں بننا چاہتے، ہم بس کاروبار پر غور کرنا چاہتے ہیں۔ یاد رہے کہ ملک میں گزشتہ عرصے کے دوران چینی بحران کے بعد وزیراعظم کی ہدایت پر کی گئی تحقیقات میں ایف آئی اے نے انکشاف کیا تھا کہ ملک میں چینی بحران کاسب سے زیادہ فائدہ حکمران جماعت کے اہم رہنما جہانگیر ترین نے اٹھایا، دوسرے نمبر پر وفاقی وزیر خسرو بختیار کے بھائی اور تیسرے نمبر پر حکمران اتحاد میں شامل مونس الٰہی کی کمپنیوں نے فائدہ اٹھایا۔

ایف آئی اے کی رپورٹ سامنے آنے کے جہانگیر ترین کو چیئرمین ٹاسک فورس برائے زراعت کے عہدے سے بھی ہٹا دیا گیا تھا جب کہ ان کے وزیراعظم اور تحریک انصاف سے تعلقات بھی پہلے جیسے نہیں رہے۔ اس بات کا اعتراف خود جہانگیر ترین نے بھی کیا تھا کہ ان کے اور عمران خان کے تعلقات اب پہلے جیسے نہیں رہے۔ تاہم ایسی خبریں گردش کر رہی تھیں جس میں کہا جا رہا تھا کہ جہانگیر ترین کسی قسم کی کوئی بغاوت کرنے جا رہے ہیں، اس حوالے سے ان کی اپوزیشن ارکان سے رابطے کی خبریں بھی گردش کر رہی تھیں، تاہم اس حوالے سے کوئی مصدقہ خبر منظرعام پر نہیں آئی تھی۔
جہانگیر ترین کے بارے میں یاد رہے کہ وہ اس وقت لندن میں موجود ہیں، جانے کے بعد انہوں نے پیغام جاری کیا تھا کہ وہ علاج کے سلسلے میں لندن آئے ہیں۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close