قومی

انسداد پولیو مہم،باقاعدہ میٹنگز نہ کرنیوالے ڈپٹی کمشنرز کی جواب طلبی ہوگی، وزیراعلیٰ پنجاب

لاہور(94 نیوز) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے 2020ء میں ماہانہ بنیادوں پر انسداد پولیو مہم چلانے کی منظوری دیتے ہوئے کہا ہے کہ  17فروری سے پنجاب کے 36 اضلاع میں خصوصی انسداد پولیو مہم چلائی جائے گی اور اس مہم میں 2کروڑ بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلائے جائیں گے، محکمہ صحت اور ضلعی انتظامیہ انسداد پولیو کے لئے وضع کردہ پلان پر 100فیصد عملدرآمد یقینی بنائیں اس ضمن میں مقرر کردہ ہدف کے حصول کیلئے کوئی کسر اٹھا نہ رکھی جائے، پنجاب کے مختلف اضلاع میں پولیو کیسز کا سامنے آنا الارمنگ ہے،وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے بعض اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کی جانب سے انسداد پولیو کے لئے باقاعدہ میٹنگز نہ کرنے پر برہمی کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ باقاعدہ میٹنگز نہ کرنے والے ڈپٹی کمشنرز کی جواب طلبی ہوگی۔

تفصیلات کےمطابق وزیراعلیٰ پنجاب کی زیرصدارت صوبائی ٹاسک فورس برائے انسدادپولیو کا اجلاس ہوا جس میں سیکرٹری پرائمری و سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے پولیو کیسز، انسداد پولیو کیلئے کئے جانے والے اقدامات اور انسداد پولیو مہم کے اہداف کے بارے میں بریفنگ دی۔

صوبائی وزراء ڈاکٹر یاسمین راشد، مراد راس، فیاض الحسن چوہان، رکن صوبائی اسمبلی مسرت جمشید چیمہ، چیف سیکرٹری، کمشنر لاہور ڈویژن، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ، متعلقہ محکموں کے سیکرٹریز، ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن و یونیسف کے نمائندگان اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔ڈویژنل کمشنرز، اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز اور چیف ایگزیکٹو آفیسرز ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹیز ویڈیولنک کے ذریعے اجلاس میں شریک ہوئے

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے 2020ء میں ہر ماہ انسداد پولیو مہم چلانے کی منظوری دیتے ہوئے کہاکہ 17فروری سے پنجاب کے 36اضلاع میں خصوصی انسدا دپولیومہم چلائی جائے گی اور اس مہم میں 2کروڑ بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلائے جائیں گے،ہائی رسک اضلاع پر خصوصی توجہ دی جائے،محکمہ صحت اور ضلعی انتظامیہ انسداد پولیو کےلئےوضع کردہ پلان پر100فیصد عملدرآمد یقینی بنائیں اوراس ضمن میں مقرر کردہ ہدف کےحصول کیلئےکوئی کسر اٹھا نہ رکھیں ، انسداد پولیو مہم میں منتخب نمائندوں اور نمبرداروں کی شمولیت ضروری ہے،کمیونٹی کی شمولیت سے انسداد پولیو کے لئے اقدامات نتیجہ خیز ثابت ہوں گے۔

انہو ں نے کہا کہ پنجاب کے مختلف اضلاع میں پولیو کیسز کا سامنے آنا الارمنگ ہے،پولیو کیسز والے اضلاع میں انتظامیہ کو موثر انداز سے پولیو سے نمٹنا ہوگا،ڈپٹی کمشنرز اپنے اضلاع میں انسداد پولیو کے لئے متحرک ہوکرفرائض سرانجام دیں ،انسداد پولیو مہم کے وضع کردہ پلان پر عملدرآمد میں کوتاہی یا غفلت ہر گز برداشت نہیں کروں گا اورانسداد پولیو مہم میں غفلت پر اب ایکشن ہوگا،اُنہوں نے بعض اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کی جانب سے انسداد پولیو کے لئے باقاعدہ میٹنگز نہ کرنے پر برہمی کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ باقاعدہ میٹنگز نہ کرنے والے ڈپٹی کمشنرز کی جواب طلبی ہوگی،انسداد پولیو مہم کے دوران ہر بچے کو انسداد پولیو کے قطرے پلانے کو یقینی بنایا جائے،صوبے سے پولیوکے خاتمے کے لئے کاوشیں جہاد ہے،مشترکہ کاوشوں سے مرض کا خاتمہ کریں گے، یہ ہمارا قومی مسئلہ ہے اور اس سے نمٹنے کیلئے سب کو مل کر کام کرنا ہوگا، انسداد پولیو کے لئے کئے جانے والے اقدامات کا ہر ماہ خود جائزہ لوں گا۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close