قومی

اسلام قبول کرنیوالی لڑکیوں نے تحفظ کیلئےہائیکورٹ سے رجوع کرلیا

زبردستی نہیں اپنی مرضی سے اسلام قبول کیا، ہماری جانوں کو خطرہ ہے

اسلام آباد(94 نیوز)گھوٹکی میں اسلام قبول کرنے والی لڑکیوں نے تحفظ کیلئے اسلام آبادہائیکورٹ سے رجوع کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق گھوٹکی میں اسلام قبول کرنے والی لڑکیوں نے تحفظ کیلئے اسلام آبادہائیکورٹ میں درخواست دائر کردی ہے۔ لڑکیوں نے درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ اسلام قبول کرنے کیلئے زبردستی نہیں کی گئی، بلکہ انہوں نے اپنی مرضی سے اسلام قبول کیا ہے۔ ارینا نے اسلام قبول کرکے اپنا نام نادیہ جبکہ روینہ نے آسیہ رکھا۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ میڈیا میں ہندولڑکیوں سے متعلق غلط پروپیگنڈا کیا جارہا ہے ،غلط پروپیگنڈے سے بہنوں اوران کے شوہروں کی جان کو خطرات ہیں ،درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ ہمیں تحفظ فراہم کرنے کیلئے پولیس کو اقدامات کی ہدایت کی جائے۔درخواست میں وزیراعلیٰ سندھ ،وزیراعلیٰ پنجاب،آئی جیز،پیمرا اور دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close