قومی

اساتذہ کے ریگولرائزیشن ایکٹ 2018میں ترمیم کر دی گئی

چار سال کی بجائے 3سال مکمل کرنے والے ایجوکیٹرز کو بھی مستقل کرنے کا فیصلہ


فیصل آباد(94 نیوز،نمائندہ خصوصی سدھار)پنجاب حکومت کی طرف سے ریگولرائزیشن ایکٹ 2018کے تحت 30اپریل 2018تک چار سال سروس مکمل کرنے والے ایجوکیٹرز کو مستقل کرنے کا حکم دیا گیا تھا جبکہ بہت سے ایجوکیٹرز ایسے بھی تھے جو 2014میں بھرتی ہوئے لیکن ان کے چار سال 30اپریل کے بعد مکمل ہو رہے تھے جس پر اساتذہ تنظیموں نے ایجوکیٹرز کو مستقل کرنے کا مطالبہ کے تھا حکومت کی طرف سے اساتذہ کے ریگو لر ا ئزیشن ایکٹ 2018میں ترمیم کر دی گئی ہے جس کے مطابق اب کنٹریکٹ میں چار سال کی بجائے تین سال مکمل کرنے والے ایجوکیٹرز کو بھی مستقل کر دیا جائے گا ایکٹ میں ترمیم سے سال 2014میں بھرتی اساتذہ کے بعد 2015اور 2016میں بھرتی ایجوکیٹرز کو بھی مستقل کیا جائے گا ڈی او ایلیمنٹری رضیہ تبسم کا کہنا ہے کہ 2014کے پچاس ایجوکیٹرز کو مستقل کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا ہے ایکٹ میں ترمیم کے بعد ا ب 2015,اور 2016میں بھرتی ہونے والے ایجوکیٹرز کی مستقلی بھی ان کا ریکارڈ طلب کیا جائے گا۔

مزید

متعلقہ خبریں

جواب دیں

Close